نواز شریف کے بیان کے بعد 21مئی کو پاکستان کے ساتھ کیساتھ کیا خوفناک کام ہونے والا ہے ، پاکستانیوں نے مصلے بچھا لیے ، نواز شریف کا ایک بیان کس طر
  16  مئی‬‮  2018     |     پاکستان

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) ملک کے معروف صحافی اور رتجزیہ کار جاوید چودھری کا کہنا ہے کہ نوازشریف کا بیان موجودہ وقت کے پیرائے میں درست نہیں ہے ۔ انھیں اس وقت کا خیال رکھنا چاہیے تھا ۔ ایک نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے جاوید چودھری کا کہنا تھا ” میاں نواز شریف ٹائمنگ کا خیال نہیں رکھ رہے‘ انہوں نے 12 مئی کو سرل المیڈا کے ذریعے ڈان لیکس ٹو فرما دی‘اس کوبھارتی میڈیا نے اس طرح لیا، میاں شہباز شریف نے اپنے بڑے بھائی کے اس بیان پر پردہ ڈالنے کی کوشش کی لیکن آج صبح میاں نواز شریف نے نیب عدالت کے اندر صحافیوں کو اپنے موبائل سے اپنا بیان پڑھ کر سنایا اور کہا‘ میں اپنے بیان پر قائم ہوں‘ انہوں نے بونیر کے جلسہ عام میں بھی فرمایا ، آج نواز شریف کے اس بیان پر نیشنل سیکورٹی کونسل کا اجلاس ہوا‘ اجلاس میں نواز شریف کے بیان کو متفقہ طور پر گمراہ کن اور غلط قرار دے کر رد کر دیا گیا‘ تاہم اجلاس کے بعد وزیراعظم نے میاں نواز شریف سے ملاقات کی اور نیشنل سیکورٹی کونسل کے اعلامیے سے یوٹرن لے لیا‘انہوں نے کہا پوری ن لیگ‘ شہبا زشریف اور میں نواز شریف کے ساتھ کھڑے ہیں۔میں سمجھتا ہوں،اس ساری کنفیوژن کی ٹائمنگ غلط ہے‘ الیکشن قریب ہیں‘ یہ بیان ن لیگ کو الیکشن میں نقصان پہنچائے گا‘میاں صاحب کو احتیاط کرنی چاہیے تھی‘ دو ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو 21 فروری کو تین ماہ دیئے تھے‘ اس 21 مئی کو یہ تین ماہ پورے ہو جائیں گے‘ نواز شریف کا یہ بیان پاکستان کو گرے لسٹ میں شامل کرنے کیلئے کافی ہے اور تین اس بیان نے نواز شریف اور شہباز شریف کے اختلاف کو بھی کھول کر سامنے رکھ دیا چنانچہ جس زاویے سے بھی دیکھا جائے میاں نواز شریف کو اس بیان کا نقصان ہو گا‘ عمران خان کا کہنا ہے، کون غدار ہے اور کون وفادار اور کیا ۔اس کنفیوژن کے فیصلے کیلئے قومی کمیشن بننا چاہیے ۔”


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
38%
کوئی رائے نہیں
8%
پسند ںہیں آئی
54%


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved